گزرا زمانہ

بے پردہ نظر آئیں جو چند بیبیاں
اکبر زمیں میں غیرت قومی سے گڑ گیا (اکبر الہ آبادی)

اکبر الہ آبادی کی روح سے معذرت کےسا تھ
……………………………………………………
اچھا ہوا مرگئے مرحوم ہوگئے
زندہ جو آج ہوتے تو کیاکیا نہ دیکھتے
اب چند بیبیاں نہیں سب ہی بیبیاں
جو پھر رہی ہیں چار سو اور کوبکو
آپ خواہ مخواہ ہی غیرت قومی سے گڑگئے
حالات ایسے ہیں کہ گڑے مردے اکھڑگئے
اب ہجر اور وصال کا کوئی نہیں سوال
محبوب آپ کے سامنے اور اس کے سامنے
آہ! محترم و ہ آپ کے زمانے کی بات تھی
ابرو کی بات کی کبھی گیسو کی بات کی
چلمن کی بات تھی تو قدموں کی چاپ تھی
امید تھی انتظار تھا ملنے کی آس تھی
موقوف ہوگیا ان زمانوں کا تذکرہ
جب سوکھے پھولوں کی کتابوں میں بات تھی

شیئرکریں
منیزہ نورالعین صدیقی صحافت کا کورس کر چکی ہیں، اور مختلف میگزین اور اخبارات میں آرٹیکلز، کہانیاں اور لکھتی رہی ہیں۔

تبصرہ کریں

Loading Facebook Comments ...

تبصرہ کریں